One Of The Best School In Pakistan
Pens International SchoolPens International SchoolPens International School
(Mon-Fri)
info@pensinternational.edu.pk
Rawalpindi

پابند سلاسل

انسان جو اشرف المخلوقات ہے لا محدود صلاحیتوں کا مالک ہے. کرنے پہ آءےتو ہیبتناک پہاڑوں کو ریزہ ریزہ کر دے
، دریاءوں کا رخ موڑ دے، وحشی اور خونخوار در ندوں کو زیر کر لے، جب کرنے پہ آیے تو زمان و مکاں کی حدوں کو توڑتا ہی چلا جاءے، کبھی ستاروں پہ کمند ڈالے تو کبھی سمندر کی تہہ میں اتر کر سیپ سے مو تی نکال لاءے،
اور پھر یہی انسان تقدیر کے سامنے ہاتھ پاوں بندھے ایک ایسے غلام کی حیثیت سے کھڑا دکھاءی دیتا ہے جسے پانی کا ایک گھونٹ حلق سے نیچے اتارنے کے لیے بھی تقدیر کے تا بع ہونا ہے، سر تا پا زنجیروں میں جکڑا ہوا یہ انسان اپنی مرضی سے پانی کا ایک گھونٹ تک بھی نہیں اپنے حلق سے نیچے نہیں اتار سکتا. اسکا ہر عمل اور ہر قول تابع یزداں ہے اور اسی کے حکم سے یہ اشرف المخلوقات سمندروں تک کو اپنا مطیع کر لیتا ہے،
کون جانتا ہے ایک شاندار زندگی خواب دیکھنے اور دکھانے والا اکبر اپنے دفتر تک بھی پہنچ سکے گا یا نہیں، کس کو خبر تھی کہ زینب کو رشتہ داروں کے کےپاس چھور کر عمرے پہ جانے والے والدین جب واپس آءیں گے تو انکی وہ نرم و نازک کلی بے دردی کے ساتھ کچلی اور مسلی جا چکی ہو گی، کو ن جا نتا تھا کہ بیٹے کی پیدایش پر میٹھاءیاں بانٹنے کے لیے نکلنے والا اکرام ایک حادثےکا شکار ھو جا ءیگا، کس کو گمان ہوگا
کہ ایک بلے باز ملک کا وزیر اعظم بن جا ءےگا،
کون سوچ سکتا ہے کہ رات کو اپنے جسم کی تجارت کر نے والی فاحشہ تہجد میں آٹھ کر اپنے خالق َے رازق نیاز کرتی ہے، تڑپتی اور بلکتی ہے، کون جانے اسکی روح اس رات ہی پرواز کر گءی ہو جب اس کو پہلی بار کسی کے ساتھ رات گزارنی پڑی ہو اور دنیا بس اسکے جسم سے کھیل رہی ہو.
یہ اور اس جیسی دیگر مثالیں ہمیں بہت سے اسباق دیتی ہیں
کوءی قابل ہو تو ہم شا ن کءی دیتے ہیں
ڈھونڈنے والوں کو دنیا بھی نءی دیتے ہیں

بشرطیکہ ہم انکو بصیرت کا چشمہ لگا کر دیکھیں
، اس خالق کا یءنات نے دنیا کا سارا نظام اپنے ہاتھوں
میں رکھا ہے، تمام خزانوں کی کنجیاں اسی قادر مطلق کےہاتھ میں ہیں
بس آنکھیں بند کر کےاسکی رضا میں راضی ہونے کے اسرار کو سمجھ لیں تو تمام پردے اترتے چلے جاتےہیں
، ہدایات اوپر سے آنی شروع ہوجاتی ہیں انسان ان کہی کو سننے لگتا ہے. غیرموجود کو دیکھنے اور محسوس کرنے لگتا ہے یہ بھی ایک تماشے کا سا سماں ہوتا ہے قدرت ہر موڑ پر دو آپشن چھوڑتی ہے اور انسان اپنےفہم و ادراک یا پھر اپنی فطرت کے مطابق انتخاب کرتا ہے اور راہ عمل پر خراماں خراماں چل پڑتا ہے، در اصل یہی وہ مقام ہے جہاں وہ اپنی تقدیر خود لکھ رہا ہوتا ہے، جس نے اس راز کو پالیا دنیا و آخرت اسکے ہوءے

2 Comments

Leave A Comment

X